Clicky

تازہ ترین خبر
ہوم / ممالک / آسٹریلیا / جنوبی افریقہ نے کئی آسٹریلوی ریکارڈزپاش پاش کرڈالے

جنوبی افریقہ نے کئی آسٹریلوی ریکارڈزپاش پاش کرڈالے

جنوبی افریقہ نے آسٹریلیا کے خلاف ہوبارٹ ٹیسٹ میں اننگز اور80رنزکی یادگار فتح حاصل کرکے کینگروز کے دیس میں مسلسل تیسری ٹیسٹ سیریز جیتنے کے ساتھ ساتھ کئی آسٹریلوی ریکارڈز بھی توڑڈالے ہیں جن کی مکمل تفصیل ہفت روزہ ’’اسپورٹس لنک‘‘شائع کریگا تاہم ان میں سے چیدہ چیدہ ریکارڈزکی تفصیل یہاں شائع کی جارہی ہے۔

ہوبارٹ ٹیسٹ ریکارڈزکے آئینے میں:

  •  جنوبی افریقہ نے ہوبارٹ ٹیسٹ میں اننگز اور80 رنز سے شکست دیکر سے میزبان آسٹریلیا کے خلاف جاری تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز2-0 سے اپنے نام کرلی ۔یہ اُس کی کینگروز کے دیس میں مسلسل تیسری سیریز وکٹری ہے۔اس سے قبل 2008/09ء اور 2012/13ء کے ٹورزمیں بھی کینگروزکو طویل فارمیٹ کی سیریزمیں شکست دے چکے تھے۔

وہ ویسٹ انڈیز اور انگلینڈ کے بعد آسٹریلیامیں مسلسل تین ٹیسٹ سیریز جیتنے والی دُنیاکی تیسری ٹیم بن گئی ہے۔ ویسٹ انڈیزنے1984ء سے 1992ء کے درمیانی عرصے میں وہاں مسلسل تین ٹیسٹ سیریز جیتی تھیں جبکہ انگلینڈنے یہ کارنامہ 1884ء اور 1888ء کے درمیانی پانچ سالوں کے دوران سرانجام دیاتھا۔

  • جنوبی افریقہ نے محض326رنزبناکر آسٹریلیاکو اننگزکے مارجن سے ہرایا جو آسٹریلوی سرزمین پر اننگزکے مارجن میں فتح حاصل کرتے وقت کسی بھی ٹیم کا مجموعی طورپرپانچواں جبکہ1993ء سے کم ترین اسکور ہے۔اس سے قبل آخری بار ویسٹ انڈیز نے 23سال قبل واکا کے مقام پر یہ کارنامہ اپنی واحد اننگزمیں 322رنزبناکر سرانجام دیاتھاجب اُس نے اننگز اور 25رنز سے کامیابی سمیٹی تھی۔
  • یہ پہلا موقع ہے کہ جنوبی افریقہ کو آسٹریلیا کو انہی کے دیس میں کسی ٹیسٹ میچ میں اننگز کے مارجن سے اُنہیں ہرایا۔
  • یہ آسٹریلیامیں مارجن کے اعتبار سے جنوبی افریقہ کی سب سے بڑی فتح ہے ،اس سے قبل سب سے بڑی فتح 2012ء میں پرتھ کے مقام پر 309 رنز کے مارجن سے حاصل کی تھی۔
  • یہ 2013ء کے بعد پہلا موقع ہے جب آسٹریلیاکو لگاتار پانچ ٹیسٹ میچوں میں ناکامی کا سامنا کرنا پڑا ۔جنوبی افریقہ کیخلاف حالیہ دوناکامیوں سے قبل کینگروز دورۂ سری لنکا کے تینوں میچز ہارکر وطن واپس پہنچے تھے۔2013ء سے قبل آسٹریلیانے آخری براوقت 1984ء میں دیکھاتھا جب اُسے لگاتار چھ ٹیسٹ میچوں میں ناکامی کا سامناکرناپڑاتھا۔
  • ہوبارٹ ٹیسٹ میں آسٹریلوی تاریخ کی بدترین بیٹنگ کارکردگی سامنے آئی جنہوں نے اپنی آخری آٹھ وکٹیں محض 32رنزکے اضافے پر گنوائیں جو اُن کی تاریخ میں آخری آٹھ وکٹوں پرمشترکہ طورپر کم ترین اسکورز ہیں۔

    جنوبی افریقہ نے کئی آسٹریلوی ریکارڈزپاش پاش کرڈالے

    مجموعی رنزمدمقابل بمقامسال
    32 انگلینڈسڈنی1888ء
    32جنوبی افریقہہوبارٹ2016ء
    34 انگلینڈملبورن1954ء
    34ویسٹ انڈیزپرتھ1993ء
    36 انگلینڈسڈنی1894ء

دُنیائے کرکٹ میں ہر ہفتے کھیلے گئے میچوں میں بننے اور ٹوٹنے والے ریکارڈز سمیت بدلتے اعدادوشمار کی مکمل تفصیل ہفت روزہ ’’اسپورٹس لنک‘‘ میں ملاحظہ کیجئے

  • ہوبارٹ ٹیسٹ میں مجموعی طورپر 16 آسٹریلوی بلے باز سنگل ڈیجٹ اسکور(0-9)پر آئوٹ ہوئے جوتاریخ میں ایک ٹیسٹ میچ میں کسی بھی ٹیم کے مشترکہ طورپر تیسرے زیادہ سنگل ڈیجٹ اسکورزہیں جبکہ آسٹریلوی تاریخ میںکبھی بھی ایک ٹیسٹ میں اس سے زیادہ کینگروز بلے باز سنگل ڈیجٹ اسکورپر آئوٹ نہیں ہوئے ۔اس سے قبل آسٹریلوی شائقین کوایسا درد ناک نظارہ آخری بار1912ء میں دیکھنا پڑاتھا۔
  • جنوبی افریقہ نے کبھی آسٹریلوی سرزمین پر میزبان سائیڈ کے خلاف3-0 کا کلین سوئپ نہیں کیا ہے۔اگر وہ سیریزکا تیسرا ٹیسٹ جیتنے میں کامیا ب ہوجاتی ہے تو وہ نئی تاریخ رقم کردیگی۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

ہاشم آملہ بھی ڈوپلیسی کیلئے اُٹھ کھڑے ہوئے

جنوبی افریقہ کے قائمقام کپتان فاف ڈوپلیسی پربال کی ساخت خراب کرنے کا الزام عائد …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے