Clicky

تازہ ترین خبر
ہوم / اہم موضوعات / ایک اوورمیں6وکٹوں کے کارنامے کس کس نے انجام دئیے؟

ایک اوورمیں6وکٹوں کے کارنامے کس کس نے انجام دئیے؟

آسٹریلوی نوجوان بولر ایلڈکیری نے گزشتہ روز ایک اوورمیں چھ وکٹیں حاصل کرکے عالمی توجہ حاصل کی ،جس کے ساتھ ساتھ شائقین اس کھوج میں لگ گئے کہ اورکتنے بولرزنے ایک اوورمیں چھ وکٹیں حاصل کرنے کا کارنامہ سرانجام دیاہے۔

آسٹریلیا میں گولڈن پوائنٹ کرکٹ کلب کی جانب سے کھیلتے ہوئے 29سالہ بولر ایلڈ کیری نے چھ وکٹیں حاصل کیں جو وکٹوریا میں مشرقی بالاراٹ کے خلاف میچ میں کیری اپنے پہلے آٹھ اوورز میں وکٹ حاصل نہیں کر سکے لیکن نویں اوور میں صورتحال تبدیل ہو گئی۔

آسٹریلیا میں گولڈن پوائنٹ کرکٹ کلب کی جانب سے کھیلتے ہوئے 29سالہ بولر ایلڈ کیری نے چھ وکٹیں حاصل کیں
آسٹریلیا میں گولڈن پوائنٹ کرکٹ کلب کی جانب سے کھیلتے ہوئے 29سالہ بولر ایلڈ کیری نے چھ وکٹیں حاصل کیں

اوور کی پہلی گیند پر بلے باز سلپ میں کیچ آؤٹ ہو گئے، نئے آنے والے باز ان کی دوسری گیند پر وکٹر کیپر کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہو گئے اور بعد میں تیسرے بلے باز کو ایل بی ڈبلیو آؤٹ کر کے ہیڑک مکمل کی۔

اپنے ساتھی کرکٹرز کے ساتھ ہیڑک کا جشن منانے کے بعد جب کیری دوبارہ بولنگ کرنے آئے تو اگلی تینوں گیندوں پر تین بلے باز کو کلین بولڈ کر دیا اور یوں حریف ٹیم کی اننگز صرف 40 رنز پر سمیٹ دی۔

29سالہ کیری کی اس یادگارپرفارمنس کے بعد سوشل میڈیا پر شائقین ایک دوسرے سے سوالات کرتے رہے کہ ایک اوورمیں چھ وکٹوں کے کارنامے کس کس نے سرانجام دئیے؟ مگر کسی کو مناسب جواب نہیں مل پایا کیونکہ اس حوالے سے کوئی متضاد دعوے موجود ہیں۔

زیادہ پرانی بات نہیں جب محض گیارہ ماہ قبل ایک کیوی ویب سائٹ نے دعویٰ کیاتھا کہ لیوک مارش نے اسکول کرکٹ کے میچ کے دوران ایک اوورمیں چھ وکٹیں حاصل کی تھیں،اس طرح کے چند دعوے اور بھی موجود ہیں جو مصدقہ نہیں ہیں۔بریٹ لی کے بارے میں بھی کہاجاتاہے کہ اُس نے 14سال کی عمرمیں جونیئرکرکٹ کے میچ میں ایک اوورمیں چھ وکٹیں حاصل کی تھیں۔

نچلے لیول کی کرکٹ کو ہٹاکر محض انٹرنیشنل میچوں میں دیکھیں تواوورمیں چھ وکٹیں حاصل کرنے کا کارنامہ آج تک کوئی بولر سرانجام نہیں دے سکاہے جہاں ایک اوورمیں زیادہ سے زیادہ چار وکٹیں حاصل کی گئی ہیں اوریہ کارنامہ چھ مختلف بولروں نے سرانجام دیاہے جن میں پاکستان کے وسیم اکرم نے 1990ء میں لاہورکے مقام پر ویسٹ انڈیزکے خلاف یہ اعزاز پایاتھا۔

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

کیا نئے عامر میں ’پرانا‘دم خم باقی نہیں رہا؟

دوکھلاڑیوں کے عین برابرکھیلے گئے میچوں میں کارکردگی کے موازنے پرمشتمل انتہائی معلوماتی اور مقبولیت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے