Clicky

ہوم / اہم موضوعات / اب5،6سال نہیں، تاحیات پابندی لگے گی

اب5،6سال نہیں، تاحیات پابندی لگے گی

پاکستان کرکٹ ٹیم کے اوپننگ بلے باز شرجیل خان اور ٹاپ آرڈربیٹسمین خالد لطیف تاحیات پابندی کی زد میں ہیں جن کی کہانی آئے روز نیا رُخ اختیارکرتی ہے۔

پاکستان کرکٹ بورڈکے چیئرمین شہریارخان اس وقت خاصے جارحانہ موڈمیں دکھائی دیتے ہیں جنہوں نے قائمہ کمیٹی بین الصوبائی رابطہ کی میٹنگ میں اس عزم کا اعادہ کیاکہ قصوروارثابت ہونے پر اسپاٹ فکسنگ میں ملوث کھلاڑیوں کو پانچ، چھ سال نہیں بلکہ تاحیات پابندی عائد کی جائیگی۔

شہریارخان نے بتایا کہ بکی سے ملاقات کے بعدپی ایس ایل کے پہلے میچ میں شرجیل خان نے وہی کیاجواینٹی کرپشن یونٹ بھانپ چکاتھا۔دونوں کھلاڑیوں نے ناصرجمشیدکے کہنے پر بکی سے ملاقات کی اور اسپاٹ فکسنگ کی حامی بھری۔ دونوں کے پی سی بی کے اینٹی کرپشن کو دئیے گئے بیان اور سابقہ بیان میں فرق ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  بکی سے کیوں اورکس لئے ملے؟ شرجیل نے بتادیا

ہم نے دونوں کھلاڑیوں کو چودہ روزکا وقت دیاہے تاکہ وہ سوچ وبچارکے بعد ہی اپنا بیان ریکارڈ کرائیں ۔دونوں کھلاڑیوں نے ناصرجمشیدکے کہنے پر بکی سے ملنے کا اعتراف کرچکے ہیں تاہم اُن کا کہناہے کہ وہ نہیں جانتے تھے کہ مذکورہ شخص بکی ہے بلکہ اُسے ایک پرستار کے طورپر ملے تھے۔

محمد عرفان کے بارے میں شہریارخان نے بتایاکہ اُسے اسپاٹ فکسنگ کی آفر ہوئی مگر اُس نے یہ بات سنی اَن سنی کردی لیکن اینٹی کرپشن یونٹ کو مطلع نہیں کیا۔اُس کے خلاف مزید تحقیقات بھی جاری ہیں۔اس موقع پر چیئرمین قائمہ کمیٹی مشاہداللہ نے بھی پلیئرزکوسخت سزائیں دینے کی حمایت کرتے ہوئے کہاکہ پی سی بی ماضی میں سخت ایکشن لیتا تو آج یہ واقعات دوبارہ نہ ہوتے۔

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

معطلی جوتے کی نوک پررکھنے والے شرجیل کیخلاف کاروائی کا امکان

پاکستان کرکٹ ٹیم کے معطل اوپنر بیٹسمین شرجیل خان کی گزشتہ روزحیدرآبادکے نیازاسٹیڈیم میں گریڈ2پلیئرزکے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے