Clicky

ہوم / اسپورٹس لنک میگزین / شاہد آفریدی کے 100+ عالمی وقومی ریکارڈز

شاہد آفریدی کے 100+ عالمی وقومی ریکارڈز

پاکستان کرکٹ میں دو ہی کھلاڑی ایسے رہے ہیں جنہیں اپنی کارکردگی سے قطع نظر عوام کا بھرپورپیار اور چاہت ملی ،ان میں عمران خان اور شاہد آفریدی شامل ہیں۔یہ دونوں ہی آل رائونڈر تھے اور خوش شکل کے مالک بھی… جس کے سبب انہوں نے بہت سارے مداح بنائے۔

شاہد آفریدی نے گزشتہ دنوں اپنی ریٹائرمنٹ کا ’غیررسمی‘اعلان کیا کہ انہوں نے جتنی انٹرنیشنل کرکٹ کھیلنی تھی،کھیل چکے۔شاہد آفریدی کے اس اعلان کے بعدپاکستان میں کھیلو ں کے مقبول ترین میگزین ’اسپورٹس لنک‘ نے آل رائونڈر کے 100 سے زائد عالمی وقومی ریکارڈزکی تفصیل شائع کرنے کاسلسلہ شروع کیاہے۔

’لالے‘کو خراج تحسین پیش کرنے کیلئے ’اسپورٹس لنک‘ اُن کے کارناموں کو مکمل تفصیل کے ساتھ قسط وار شائع کررہا ہے۔ جس میںاُن کے اُن تمام عالمی وقومی ریکارڈز اور اعزازات کا احوال پیش کیا جائے گا جو اس سے قبل شاید ہی آپ جانتے ہوں۔

کرکٹ اُردوکے قارئین کیلئے ’شاہدآفریدی کے100+ عالمی وقومی ریکارڈز‘کی پہلی قسط آپ کی خدمت میں پیش کی جارہی ہے۔

قسط: 1
سبھی جانتے ہیں کہ شاہد آفریدی کی وجہ شہرت اُن کی 4اکتوبر1996ء کو نیروبی کے مقام پر سری لنکا کے خلاف37 گیندوں پر اُس وقت کی تیز ترین سنچری بنی جس کے دو سال بعد جاکر اُنہیں ٹیسٹ کیپ سے نوازا گیا۔یہاں ہم اپنے ’فارمیٹ‘کے پیش نظر پہلے اُن کے ٹیسٹ کیریئراورکارناموں کو پیش کررہے ہیں جس کے بعد باری باری اُن کے ون ڈے اور ٹوئنٹی 20 انٹرنیشنل کرکٹ میں کارناموں کا احوال آپ کی خدمت میں پیش کیا جائے گا۔

ریکارڈسازٹیسٹ ڈیبیو:

ون ڈے کی طرح شاہد آفریدی کا ٹیسٹ کیریئر بھی پریوں کی داستاں جیسا شاندار تھا جنہوں نے اکتوبر1998ء میں کراچی کے مقام پر آسٹریلیاکے خلاف اپنے ٹیسٹ ڈیبیوکی پہلی اننگزمیں 52رنزکے عوض پانچ وکٹیں حاصل کرنے کا کارنامہ سرانجام دے ڈالا۔

وہ پاکستانی تاریخ میں ٹیسٹ ڈیبیو میں 5 وکٹیں حاصل کرنے والے محض دوسرے اسپنر تھے، اُن سے قبل 1969ء میں کراچی ہی کے مقام پرمحمد نذیرنے نیوزی لینڈکے خلاف یہ کارنامہ سرانجام دیاتھا۔ مجموعی پاکستانی بولرز میں شاہد آفریدی سے قبل ٹیسٹ ڈیبیو کی کسی اننگزمیں پانچ یا زائد وکٹیں کرنے کا اعزاز صرف چار بولروں عارف بٹ،محمد نذیر،شاہد نذیر اور محمد زاہدکو ہی حاصل تھا۔

شاہد آفریدی اپنے ڈیبیو ٹیسٹ میں بولنگ کرارہے ہیں جس میں ڈیبیو ٹیسٹ میں پانچ وکٹیں حاصل کرنے والے کم عمر ترین اسپنر بنے

1998ء کے اس یادگار ٹیسٹ میں 5/52کی کارکردگی کی بدولت شاہد آفریدی آسٹریلیاکے خلاف ٹیسٹ ڈیبیومیں پانچ وکٹیں حاصل کرنے والے واحد پاکستانی اسپنر بن گئے جن کے پہلے یا بعد میں تاحال کوئی دوسرا پاکستانی سلو بولر یہ کارنامہ سرانجام نہیں دے سکاہے۔

علاوہ ازیں،وہ مجموعی بولرزمیں عارف بٹ( فاسٹ بولر) کے بعد آسٹریلیاکے خلاف ٹیسٹ ڈیبیومیں پانچ وکٹیں حاصل کرنے والے محض دوسرے پاکستانی بولر بھی ہیںجن کے بعد تاحال کوئی اور پاکستانی بولر یہ اعزاز نہیں پاسکاہے۔

کراچی ٹیسٹ میں شاہد آفریدی نے18 سال اور235دن کی عمرمیں 5/52کی کارکردگی دکھاکر ٹیسٹ ڈیبیومیں5+ وکٹو ں کی کارکردگی دکھانے والے دُنیاکے کم عمرترین اسپنرہونے کا اعزاز بھی حاصل کیا اوریہ عالمی ریکارڈ آج بھی انہی کے نام ہے۔

اس فہرست میں دوسرے نمبرپر بنگلہ دیش کے مہدی حسن مرزاہیں جنہوں نے اکتوبر2016ء میں انگلینڈکے خلاف 18سال اور 361دن کی عمر میں ٹیسٹ ڈیبیوکرتے ہوئے اننگزمیں پانچ وکٹیں حاصل کرنے کا کارنامہ سرانجام دیاتھا۔یوں شاہد آفریدی دُنیاکے پہلے اسپنرہیں جنہوں نے19 سال سے کم عمر میں ڈیبیو ٹیسٹ کی ایک اننگز میں پانچ وکٹیں حاصل کرنے کا کارنامہ سرانجام دیاتھا۔

مجموعی پاکستانی بولروں(بشمول فاسٹ بولرز) میں بھی کوئی آج تک کم عمری میں یہ سنگ میل عبور کرنے میں شاہد آفریدی کوپیچھے نہیں چھوڑ سکا۔اُن کے بعد کم عمری میں ٹیسٹ ڈیبیومیں پانچ وکٹیں حاصل کرنے دوسرے پاکستانی بولر شاہد نذیر ہیں جنہوں نے ان سے دوسال قبل (1996ء میں) شیخوپورہ کے مقام پر یہ کارنامہ سرانجام دیاتھا۔

بھارتی سرزمین پر پہلے ہی ٹیسٹ میں بڑی اننگز کا پاکستانی ریکارڈ:

ٹیسٹ ڈیبیوکے تین ماہ بعد شاہد آفریدی کو اپنے کیریئرکا دوسرا ٹیسٹ میچ بھارتی وینیو چنئی (مدراس) میں ملاتو یہاں آفریدی نے بولنگ میں ایک ہی اننگز میں تین وکٹیں حاصل کرنے سمیت بیٹنگ میں دو ہاتھ دکھاتے ہوئے دوسری اننگزمیں 21 چوکوں اور تین چھکوں کی مددسے 141رنزکی شاندار اننگزکھیل ڈالی جس کی مددسے پاکستان یہ میچ 12رنز سے جیتنے میں کامیاب رہا لیکن میچ کے متعصب ججز نے اس میچ کا بہترین کھلاڑی سچن ٹنڈولکرکو قرار دیا جو آخری اننگزمیں136رنزبنانے کے بعد اپنی ٹیم کو شکست سے نہیں بچاسکے تھے۔

141رنزکی اس اننگزکی بدولت شاہد آفریدی بھارتی سرزمین پر اپنے پہلے ہی ٹیسٹ میں140+ رنزکی اننگز کھیلنے والے پہلے پاکستانی بلے باز بھی بن گئے اور اب تک کوئی دوسرا پاکستانی بلے باز وہاںپہلے ٹیسٹ میں ایسی بڑی اننگز نہیں کھیل سکا ہے۔

شاہد آفریدی نے کیرئیر کے دوسرے ہی ٹیسٹ میچ میں 141 رنزکی شاندار اننگز کھیلی

علاوہ ازیں،شاہد آفریدی کے 141رنز،کسی بھی پاکستانی بلے باز کی بھارتی سرزمین پر140+رنزکی محض دوسریاننگز بھی تھی،ا س سے قبل یہ کارنامہ صرف حنیف محمد ہی سرانجام دے سکے تھے۔

141رنزکی اننگزکے دوران شاہد آفریدی نے تین بار گیند بائونڈری لائن کے باہرپھینک کر بھارتی سرزمین پر ایک ٹیسٹ اننگزمیں سب سے زیادہ چھکے لگانے والے پاکستانی اوپنر ہونے کاقومی ریکارڈ قائم کیا اور آج تک کوئی دوسرا پاکستانی اوپنر وہاں ایک اننگز میں ایکسے زائد چھکے نہیں لگاسکا ہے جبکہ آفریدی نے یہ کارنامہ چاربارسرانجام دیاتھا۔

پاکستانی تیز ترین سنچری اوپننگ شراکت:

اسی دورۂ بھارت(1999ء) کے دوسرے دہلی ٹیسٹ میں جب پاکستان ٹیم 420رنزکے بڑے ہدف کا تعاقب کررہی تھی تو شاہد آفریدی اور سعید انورنے جارحانہ اندازمیں بیٹنگ کرتے ہوئے25 ویں اوورمیں ہی پاکستان کے 100رنزمکمل کرادیئے۔

دونوں نے پہلی وکٹ پر 4.15رنز فی اوور کے شاندار رن ریٹ سے101رنز کی شراکت قائم کی جو اُس وقت کسی بھی پاکستانی جوڑی کا تیز ترین سنچری اوپننگ شراکت کا ریکارڈ تھا اوراب بھی بہترین رن ریٹ سے بنائی گئی پاکستانی اوپننگ شراکتوں کی فہرست میں پانچویں نمبرپر ہے۔اس شراکت کی بدولت شاہد آفریدی اور سعید انورکو 4رنز فی اوور سے زائد رن ریٹ سے سنچری شراکت قائم کرنے والی پہلی پاکستانی اوپننگ جوڑی ہونے کا بھی اعزاز حاصل ہوگیا۔

سری لنکاکیخلاف ریکارڈپاکستانی اوپننگ شراکت:

مارچ1999ء میں ایشین ٹیسٹ چیمپئن شپ کے سلسلے میں لاہورمیں کھیلے گئے پاکستان اور سری لنکاکے درمیان ٹیسٹ میچ میں پاکستان کی دوسری اننگزکے دوران شاہدآفریدی نے 71.18 رنز فی 100 بالزکے اسٹرائک ریٹ سے بیٹنگ کرتے ہوئے84رنزکی شاندار اننگزکھیلی جو محسن خان کے بعد کسی بھی پاکستانی اوپنرکی سب سے عمدہ اسٹرائک ریٹ سے سری لنکاکے خلاف کھیلی گئی80+رنزکی اننگز ہے۔

میگزین حاصل کرنے کیلئے >>  پاکستان بھر میں ’اسپورٹس لنک‘ کے ڈسٹری بیوٹرز

اپنی اس اننگزکے دوران شاہد آفریدی نے ساتھی اوپنر وجاہت اللہ واسطی کے ساتھ مل کر 156 رنزکی اوپننگ شراکت قائم کی جوآج بھی سری لنکا کے خلاف پاکستان کی سب سے بڑی اوپننگ شراکت ہے۔ اس کے علاوہ کوئی اورپاکستانی اوپننگ جوڑی تاحال 150+رنزکی شراکت بھی قائم نہیں کرسکی ہے۔

’اسپورٹس لنک‘ آپ کی خدمت میں شاہد آفریدی کے 20سالہ طویل انٹرنیشنل کیرئیر میں اُن کی جانب سے قائم کئے گئے ہرعالمی و قومی ریکارڈسمیت تمام اعزازات مکمل تفصیل کے ساتھ پیش کررہاہے جودُنیاکے کسی بھی اشاعتی ادارے کی جانب سے پہلی بار ترتیب دئیے جا رہے ہیں۔جن سے آگاہی کیلئے آپ اس سلسلے کی کوئی قسط مس نہ کریں۔

ویسٹ انڈیزکیخلاف اننگزمیں زیادہ چھکے اور ریکارڈ شراکت:

فروری2002 ء میں ویسٹ انڈیزکے خلاف شارجہ کے نیوٹرل مقام پر کھیلے گئے سیریزکے دوسرے ٹیسٹ میچ میں شاہد آفریدی نے 16چوکوں اور تین چھکوں کی مددسے107رنزکی شاندار اننگزکھیلی۔

یہ اُس وقت کسی بھی پاکستانی اوپنرکی جانب سے ویسٹ انڈیزکے خلاف70+کے اسٹرائک ریٹ سے کھیلی گئی محض دوسری سنچری شراکت تھی جس کے آگے صرف عمران نذیرتھے جنہوں نے دوسال قبل محض ایک گیندکے فرق سے برتری حاصل کی تھی۔

شاہد آفریدی نے اپنی107رنزکی اس اننگزکے دوران تین بار گیند بائونڈری لائن کے باہرپھینک کر ویسٹ انڈیزکے خلاف ایک ٹیسٹ اننگزمیں زیادہ چھکوں کا پاکستانی ریکارڈ بھی برابرکردیا۔

اس سے قبل یہ اعزاز صرف وسیم راجہ اورہارون رشید ہی حاصل کرسکے تھے تاہم ان دونوں اوپنرزنے نچلے نمبروں پر گیند پرانا ہونے کے ساتھ چھکے لگائے تھے جس کا واضح مطلب یہ ہے کہ شاہد آفریدی ویسٹ انڈیزکے خلاف ایک ٹیسٹ اننگزمیں سب سے زیادہ چھکے لگانے والے پاکستانی اوپنر بن گئے جن سے قبل کوئی بھی پاکستانی اوپننگ بلے باز کالی آندھی کے خلاف ایک اننگزمیں ایک سے زائد چھکا نہیں لگاسکاتھا

اوریہ ریکارڈ آج بھی شاہد آفریدی کے نام ہے جن کے بعد صرف اظہرعلی ہی دوسرے پاکستانی اوپنر ہیں جنہیں کیربیئن سائیڈکے خلاف ایک اننگزمیں 2چھکے لگانے کا اعزاز حاصل ہوااورانہوں نے یہ کارنامہ گزشتہ سال اپنی ٹرپل سنچری کے دوران سرانجام دیاتھا۔

2002 ء میں شارجہ کے مقام پر کھیلی گئی اپنی 107 رنزکی اننگزکے دوران شاہد آفریدی نے یونس خان کے ساتھ مل کر دوسری وکٹ پر 190رنزکی شاندار شراکت قائم کی جو کیربیئن سائیڈکیخلاف آج بھی دوسری وکٹ پر قائم ہونے والی سب سے بڑی شراکت ہے۔یہ شراکت 4.38رنز فی اوورکے رن ریٹ سے بنی جو رن ریٹ کے اعتبارسے بھی ویسٹ انڈیزکے خلاف اس وکٹ پر قائم ہونے والی تیز ترین سنچری شراکت ہے۔

ویوین رچرڈزکا عالمی ریکارڈ توڑا:

2005ء میں پاکستان ٹیم بھارت کے دورے پر گئی تو دوسرے کولکتہ ٹیسٹ کی آخری اننگزمیں شاہد آفریدی نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے 9 چوکوں اور دوچھکوں کی مددسے گیندوں کے عین برابر 59رنز بنائے۔یہ کسی بھی پاکستانی اوپنر کی بھارت کے خلاف 100+کے اسٹرائک ریٹ سے کھیلی گئی پہلی ففٹی پلس رنزکی اننگز تھی۔

بعدازاں اگلے میچ میں انہوں نے محض34 گیندوں پر 170.58کے اسٹرائک ریٹ سے 58رنزبناکر اپنا ریکارڈہی توڑ دیا۔

یہ آج بھی دُنیاکے کسی بھی اوپنرکی بھارت کے خلاف سب سے عمدہ اسٹرائک ریٹ سے کھیلی گئی اننگزہے۔’لالے‘ کے علاوہ دُنیاکاکوئی بھی دوسرا اوپنر بھارت کے خلاف 150+رنزکے اسٹرائک ریٹ سے ففٹی اننگز نہیں کھیل سکاہے۔اس فہرست میں دوسرے نمبرپر موجود تلکا رتنے دلشان نے بھی2010ء میں 144.68کے اسٹرائک ریٹ سے 47 گیندوں پر68*رنزبنائے تھے۔

علاوہ ازیں،170.58کے اسٹرائک ریٹ سے کھیلی گئی اس اننگزکی بدولت شاہد آفریدی نے بھارت کے خلاف کسی بھی پوزیشن پر کھیلی گئی تیز ترین ففٹی پلس اننگزکا ویسٹ انڈین بلے باز ویوین رچرڈزکا عالمی ریکارڈ توڑا۔اس سے قبل رچرڈزنے1983ء میں کنگسٹن کے مقام پر بھارت کے خلاف 169.44 کے اسٹرائک ریٹ سے 36 گیندوں پر 61رنز بناکر یہ اعزاز حاصل کیاتھا۔

انٹرنیشنل کرکٹ میں سب سے زیادہ ریکارڈز کے مالک شاہد آفریدی کے عالمی وقومی ریکارڈزاور کارناموں کی طویل فہرست کی پہلی قسط آپ نے ملاحظہ کی۔اُن کے کارناموں اور ریکارڈزکی مزیدتفصیلات آپ ’اسپورٹس لنک‘ میگزین میں اگلی قسطوں میںملاحظہ کرسکیں گے۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

پاک ویسٹ انڈیزتاریخ کی بدترین بیٹنگ کا ریکارڈبرابر

ویسٹ انڈیز کے خلاف برج ٹائون ٹیسٹ کے آخری روز پاکستان ٹیم 188رنزکے ہدف کا …

ایک تبصرہ

  1. de villiers ka career btaye

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے