Clicky

ہوم / اہم موضوعات / شاداب خان نے پاکستان کو ایک اور فتح دلادی

شاداب خان نے پاکستان کو ایک اور فتح دلادی

پاکستان کرکٹ ٹیم نے اپنے نئے لیگ اسپنر شاداب خان کی شانداربولنگ کی بدولت مسلسل دوسرے ٹوئنٹی20میچ میں فتح حاصل کرکے سیریز میں دو،صفرکی ناقابل شکست برتری حاصل کرلی ہے۔

پاکستان ٹیم نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ بیس اوورزمیں تمام وکٹوں کے نقصان پر صرف 132رنزبنائے جس میں اننگزکے آخری حصے میں محض 10 گیندوں پر ایک چوکے اور دو چھکوں کی مدد سے 24رنزبنانے والے وہاب ریاض کا نمایاں کردار تھا۔

دیگر پاکستانی بلے بازوں میں شعیب ملک 28(تین چوکے،ایک چھکا)اور بابراعظم27رنز(چارچوکے)بناکر نمایاں رہے۔کامران اکمل مسلسل دوسرے میچ میں ناکام ہوئے جو اس بار کھاتہ کھولے بغیر ہی پویلین واپس لوٹے۔

ویسٹ انڈیزکی جانب سے سنیل نرائن اور کارلوس بریتھویٹ نے سب سے زیادہ تین تین وکٹیں حاصل کیں۔

جواب میں پاکستان ٹیم ،محض10رنزکے مجموعی ٹوٹل پر ویسٹ انڈیزکی پہلی وکٹ گرانے میں کامیاب ہوگئی جب عمادوسیم نے اوپنر ایون لیوس کو رن آئوٹ کردیا۔بعدازاں چدوِک والٹن اور مارلن سموئلز نے دوسری وکٹ پر ففٹی رنزکی شراکت قائم کرکے میچ پر گرفت کافی حد تک مضبوط کرلی۔

آٹھویں اوورکی آخری دونوں گیندوں پر سموئلز نے عمادوسیم کو لگاتار دو چھکے لگاکر ٹیم کا مجموعہ 60/1تک پہنچایا تو ویسٹ انڈیزکو اگلے 12اوورزمیں صرف 6.08رنزفی اوورکے رن ریٹ سے مزید 73رنز درکار تھے۔اس موقع پر شاداب خان نے اپنے دوسرے اوورکی پہلی ہی گیندپر والٹن (21رنز)کو میدان بدرکرکے حریف ٹیم کی مشکلات بڑھانے کا سلسلہ شروع کیا۔

اگلے اوورمیں حسن علی نے لینڈی سیمنزکو صرف ایک رن بنانے کا موقع دینے کے بعد میدان بدرکیا تو دسویں اوورمیں شاداب خان نے یکے بعد دیگرے کیرون پولارڈاور رومن پاول کو میدان بدرکے ویسٹ انڈیزکو 76/5کی صورتحال سے دوچار کردیا۔

اس موقع پر مارلن سموئلز اور کپتان کارلوس بریتھویٹ پاکستان کی راہ میں رکاوٹ بنے تاہم 13ویں اوورمیں شاداب خان نے44رنزبنانے والے مارلن سموئلزکو بھی کپتان سرفرازاحمدکے ہاتھوں کیچ کرادیا۔جس کے بعد ماسوائے 17 گیندوں پر دو چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے ناقابل شکست *26رنزبنانے والے جیسن ہولڈرکے کوئی اور ویسٹ انڈیز بلے باز پاکستانی بولروں کی نپی تلی بولنگ کا مقابلہ نہ کرسکا۔

دوسرے ٹوئنٹی میچ میں کامران اکمل بغیر کوئی رن بنائے سموئل بدری کے ہاتھوں بولڈ ہوئے

ویسٹ انڈیزکو آخری 12 گیندوں پر 19رنز درکار تھے تو 19ویں اوورمیں وہاب ریاض نے کپتان بریتھویٹ کی وکٹ حاصل کرنے سمیت صرف5رنز دیکرمیچ پرپاکستان کی گرفت مضبوط کردی تاہم آخری اوورکی پہلی دونوں گیندوں پر سنیل نرائن نے حسن علی کو مسلسل دو چوکے لگاکر میچ دلچسپ بنادیا۔

اس موقع پر ویسٹ انڈیزکوآخری چار گیندوں پر مزید صرف6رنز درکار تھے ،اس موقع پر حسن علی نے وائیڈبال پھینک کر ہدف مزید آسان بنادیاتاہم اگلی گیندضائع کرانے کے بعد انہوں نے پانچویں گیندپرسنیل نرائن کومیدان بدرکرنے کے بعد آخری گیندپرجیسن ہولڈرکو صرف ایک رن بنانے کا موقع دیکر پاکستان کو تین رنز سے فتح دلادی۔

شاداب خان نے اپنے اوورمیں6رنز دینے کے بعداگلے تین اوورکی 18گیندوں میں سے 14ڈاٹ بالزکراتے ہوئے مزید صرف 8رنز کے عوض چار وکٹیں حاصل کرکے پاکستان کو فتحیاب کرانے میں اہم کردار اداکیا۔اس شاندار کارکردگی پر اُنہیں میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیاگیا۔واضح رہے کہ پہلے میچ میں بھی اُنہیں بہترین کھلاڑی قرار دیاگیاتھا۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

بابراعظم کی کیرئیربیسٹ رینکنگ،عمادعالمی نمبر2بولر بن گئے

ویسٹ انڈیز اور پاکستان کے درمیان چار ٹوئنٹی 20میچوں کی سیریزکے خاتمے پر آئی سی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے