Clicky

ہوم / اہم موضوعات / کل کون جیتے گا، ریکارڈزکیا کہتے ہیں؟

کل کون جیتے گا، ریکارڈزکیا کہتے ہیں؟

پاکستان کرکٹ ٹیم آسٹریلیاکے خلاف پانچ ون ڈے میچوں کی سیریز کے دوسرے ون ڈے میچ کیلئے برسبین سے ملبورن پہنچ گئی ہے۔

پی سی بی کی جاری تصاویر سے بظاہر دکھائی دیتاہے کہ کپتان اظہرعلی مکمل فٹ ہیں جو دوسرے ون ڈے میچ کیلئے دستیاب ہوں گے جس سے قیادت کا بحران بھی ختم ہوجائے گا جو اُن کی عدم شرکت کی صورت میں پیداہوسکتاہے۔

پاکستان کا میزبان آسٹریلیاکے خلاف ملبورن میں ون ڈے ٹریک ریکارڈ زیادہ اچھا نہیں ہے جس نے وہاں کھیلے گئے 13 باہمی ون ڈے میچوں میں صرف تین جیتے ہیں جس کے بدلے اُسے دس شکستوں کا سامناکرنا پڑا ہے۔پاکستان نے یہاں (ملبورن میں)آخری بار24فروری 1985ء کے بعد سے میزبان سائیڈکے خلاف کوئی ون ڈے میچ نہیں جیتا ہے۔

گزشتہ 32سالوں سے ملبورن میں اپنی پہلی فتح کی متلاشی پاکستان ٹیم اس باربھی یہاں فتح کیلئے فیورٹ نہیں ہے جسے مختلف مسائل کے بہ یک وقت گھیراہواہے۔

پاکستان کی ملبورن میں صرف تین کامیابیاں محض زمبابوے کے بعد کسی بھی ٹیم نے میزبان سائیڈکے خلاف کم ترین فتوحات ہیں حتیٰ کہ نیوزی لینڈ،بھارت، سری لنکا اور ویسٹ انڈیز بھی یہاں زائد فتوحات حاصل کرچکی ہیں۔

آج تک کوئی پاکستانی بلے باز ملبورن میں آسٹریلیاکے خلاف سنچری اسکورنہیں کرسکاہے ۔یہاں وسیم اکرم کو پاکستان کی جانب سے سب سے زیادہ 86رنزبنانے کا اعزاز حاصل ہے جو یہاں مشترکہ طورپرکسی بھی بلے باز کی تیسری بڑی انفرادی اننگز بھی ہے۔

ملبورن میں اب تک کھیلے گئے 13 ون ڈے انٹرنیشنل میچوں میں صرف ایک ہی سنچری اسکورہوسکی ہے جو 1989ء میں جیف مارش نے 125رنزبناکراپنے نام کے آگے درج کرائی تھی۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

وارنر پہلی بارنمبرون بیٹسمین بن گئے،بابراعظم اور شرجیل کی ترقی

پاکستان اورآسٹریلیا کے درمیان ون ڈے سیریز کے اختتام پر جاری ہونیوالی رینکنگ میں ڈیوڈ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے