Clicky

ہوم / اہم موضوعات / وہاب ریاض نے نیا عالمی ریکارڈ قائم کردیا[ریکارڈز]

وہاب ریاض نے نیا عالمی ریکارڈ قائم کردیا[ریکارڈز]

دوسرے پاک- ویسٹ انڈیزمیچ کے دوران شائقین کرکٹ کو کافی سنسنی خیز کرکٹ دیکھنے کو ملی جب پاکستان نے اپنے بولرزکی عمدہ کارکردگی کی بدولت 133رنزکے قلیل مجموعے کا دفاع کرتے ہوئے تین رنز سے کامیابی حاصل کی۔اس میچ میں تبدیل ہونے والے مجموعی اعدادوشمار اور ریکارڈز ذیل میں پیش کئے جارہے ہیں۔

کامران اکمل کا ساتواں ’ڈک‘

پاکستان کرکٹ ٹیم کے اوپننگ بیٹسمین کامران اکمل کوئی رن بنائے بغیر ہی سموئل بدری کی گیندپر بولڈ ہوگئے۔ یہ اُن کے ٹوئنٹی20کیرئیرمیں ساتواں موقع تھا جب وہ صفرپر میدان بدر ہوئے جو اس فارمیٹ میں شاہد آفریدی اور عمراکمل کے بعد کسی بھی پاکستان کی جانب سے تیسرے زیادہ ’’ڈک‘‘ ہیں۔

پاکستان کی مسلسل پانچویں فتح کا ریکارڈ پانچواں کارنامہ:

پاکستان ٹیم نے تین رنز سے کامیابی حاصل کرکے اپنی مسلسل ٹوئنٹی 20کے سلسلے کو آگے بڑھاتے ہوئے 5تک پہنچادیا۔یہ پانچواں موقع ہے کہ پاکستان ٹیم نے مسلسل پانچ یا زائد ٹوئنٹی20میچز جیتے۔ (تفصیل پڑھیں)پاکستان کے بعد جنوبی افریقہ 4بار،آسٹریلیا،سری لنکا اور بھارت تین تین بار،نیوزی لینڈ، انگلینڈ اور افغانستان 2 بارجبکہ ویسٹ انڈیز، آئرلینڈ اور ہانگ کانگ ایک ایک بار لگاتار 5+ ٹوئنٹی20میچز جیت چکی ہیں۔

شاداب خان نے نیا قومی اعزاز پالیا

پاکستان کرکٹ ٹیم کے لیگ اسپنر شاداب خان نے ویسٹ انڈیزکے خلاف پہلے اور دوسرے ٹوئنٹی20میچوں میں شاندار کارکردگی دکھاکر کیریئر کے پہلے دونوں ٹوئنٹی20میچوں میں مین آف دی میچ ایوارڈحاصل کرنے والے دُنیاکے تیسرے کرکٹر بن گئے ۔ اُن سے قبل یہ کارنامہ صرف سری لنکاکے سنتھ جے سوریا اور اجنتھا مینڈس ہی یہ اعزاز پاسکے تھے۔شاداب خان سے قبل کوئی بھی پاکستانی کرکٹر اس اعزاز کونہیں پاسکاتھا۔

وہاب ریاض نے نیا عالمی ریکارڈ قائم کردیا

پاکستان ٹیم کے فاسٹ بولر وہاب ریاض نے محض10 گیندوں پر ایک چوکے اور دوچھکوں کی مددسے 240.00کے اسٹرائک ریٹ سے 24 رنز بنانے میں کامیاب رہے۔یوں وہ ٹوئنٹی20انٹرنیشنل کرکٹ میں آخری دو نمبروں(10-11)پربیٹنگ کرتے ہوئے کم ازکم دس بالز کا سامناکرنے والے ٹیل اینڈرزمیں سب سے زیادہ اسٹرائک ریٹ سے رنزبنانے والے بلے باز بن گئے۔

درحقیقت،وہ گیندوں سے دوگنے رنزبنانے والے دُنیاکے پہلے ٹیل اینڈرہیں۔اس سے قبل ان پوزیشنز پر کم ازکم دس بالز کھیلنے والے ٹیل اینڈرزمیں سب سے زیادہ اسٹرائک ریٹ سے رنزبنانے کا اعزاز بھارت کے سزایافتہ سری سانتھ کے نام تھا جس نے 2007ء کے اولین ورلڈٹی ٹوئنٹی کے دوران جوہانسبرگ کے مقام پر نیوزی لینڈکے خلاف 190.00 کے اسکورنگ ریٹ سے دس گیندوں پر چار چوکوں کی مددسے 19* رنزبنائے تھے۔

پاکستان نے جنوبی افریقی ریکارڈبرابرکردیا

پاکستان کرکٹ ٹیم نے 132کے اسکورکا کامیابی سے دفاع کیا۔یہ مجموعی طورپر17موقع تھا جب پاکستان ٹیم نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے 135یا اس سے کم اسکورپر کا دفاع کرنے میں کامیاب رہی۔اس طرح اُس نے 135یاکم اسکور کا سب سے زیادہ 17بار دفاع کرنے کا جنوبی افریقی عالمی ریکارڈبرابرکردیا۔اس فہرست میں تیسرے نمبرپرسری لنکا ہے جس نے چودہ بار اتنے کم ٹوٹلز کا کامیابی سے دفاع کیاہے۔

فخرزماں 74ویں پاکستانی ٹوئنٹی20کرکٹر بن گئے

ویسٹ انڈیزکے خلاف دوسرے ٹوئنٹی20میچ میں پاکستانی ٹیم نے نئے کرکٹر فخرزماں کا ڈیبیوکرایا جو اس فارمیٹ میں پاکستان کی نمائندگی کرنے والے 74ویں کرکٹر بن گئے ہیں۔واضح رہے کہ گزشتہ میچ میں شاداب خان یہ اعزاز پانے والے73ویں پاکستانی کرکٹر بنے تھے تاہم ٹائپنگ کی غلطی کی وجہ سے 51ویں پلیئر لکھا گیاتھا۔لہٰذا یہ درستگی نوٹ کرلی جائے۔

واضح رہے کہ عالمی کرکٹ میں آسٹریلیاکے سب سے زیادہ 86 پلیئرز ٹوئنٹی20ڈیبیوزکرچکے ہیں۔جس کے بعد انگلینڈکے 76 اور پاکستان کے 74پلیئرزنے یہ اعزاز پایاہے۔

ویسٹ انڈیزپانچویں بارچھوٹاہدف عبورکرنے میں ناکام

ویسٹ انڈین کرکٹ ٹیم پاکستان کے خلاف ٹرینیڈاڈ میں کھیلے گئے دوسرے ٹوئنٹی20میچ میں133رنزکا ہدف عبورکرنے میں ناکام رہی جو اُس کا کسی بھی ٹیم کے خلاف135یا کم رنزکاہدف عبور نہ کرپانے کا مجموعی طورپر پانچواں جبکہ پاکستان کے خلاف پہلا واقعہ ہے۔ویسٹ انڈیزکومجموعی طورپرسولہ بار 135یا کم رنزکے اہداف ملے ہیں جن میںسے دو میچز بارش کی نذر ہوجانے کے علاوہ دیگر 14 فیصلہ کن میچوں میں اُس نے نوبار کامیابی حاصل کی ہے۔

خبردار: کچھ ویب سائٹس ’کرکٹ اُردو‘کے ریکارڈزکا ڈیٹا بغیر اجازت شائع کررہی ہیں،جن میں ملک کی تین سرفہرست ویب سائٹس بھی شامل ہیں۔اگر یہ سلسلہ نہ روکا گیا تو ’کرکٹ اُردو‘قانونی چارہ جوئی کا اختیار رکھتا ہے۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

’اسپورٹس لنک‘ کا چیمپئنزٹرافی ایڈیشن 2 شائع ہوگیا

پاکستان میں کھیلوں کے سرفہرست میگزین ’’اسپورٹس لنک‘‘ نے آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے