Clicky

ہوم / اہم موضوعات / پاکستان کی ورلڈکپ میں براہ راست شرکت کا امکان روشن

پاکستان کی ورلڈکپ میں براہ راست شرکت کا امکان روشن

پاکستان کرکٹ ٹیم کی انگلینڈمیں شیڈول ورلڈکپ2019ء میںبراہ راست شرکت کا امکان روشن ہوگیاہے جس پر تاریخ میں پہلی بار کوالیفائنگ رائونڈ کھیلنے کی تلوار لٹک رہی ہے۔

پاکستان کرکٹ ٹیم تازہ رینکنگ میں بدستور آٹھویں نمبرپر موجود ہے جو اپنے سے نچلے نمبرپر موجود ویسٹ انڈیز سے تین پوائنٹس آگے ہے۔پاکستان کو ٹاپ 8 ٹیمیں موجود رہنے کیلئے دورۂ آسٹریلیامیں کم ازکم ایک میچ جیتنا ضروری تھا جو اُس نے جیت لیا۔

اس وقت پاکستان ٹیم آئی سی سی ون ڈے رینکنگ میں آٹھویں نمبرپر موجود ہے جس کے نیچے نویں نمبرپر موجودویسٹ انڈیز اُس سے تین ریٹنگ پوائنٹس پیچھے ہے جبکہ اُس سے اوپر ساتویں درجے پر موجود بنگلہ دیشی ٹیم دو پوائنٹس آگے ہے۔بنگلہ دیش کیلئے اگلی ون ڈے اسائنمنٹ مئی میں آئرلینڈمیں ٹرائنگولر سیریزہے جس میں نیوزی لینڈ تیسری ٹیم کے طورپرموجودہوگی۔

حالیہ دورۂ آسٹریلیامیں بابر اعظم اور شرجیل خان کی عمدہ کارکردگی کی بدولت پاکستان ٹیم ایک میچ جیت کر اپنی آٹھویں پوزیشن محفوظ بنانے میں کامیاب رہی
حالیہ دورۂ آسٹریلیامیں بابر اعظم اور شرجیل خان کی عمدہ کارکردگی کی بدولت پاکستان ٹیم ایک میچ جیت کر اپنی آٹھویں پوزیشن محفوظ بنانے میں کامیاب رہی

اس سیریز کے بعد اُسے انگلینڈمیں آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کھیلنا ہے جہاں وہ انگلینڈ،آسٹریلیا اور نیوزی لینڈکے گروپ میں موجود ہے جس میں اُس کی فتح کے امکانات انتہائی معدوم دکھائی دیتے ہیں۔یہ دونوں ایونٹس آئی سی سی ورلڈکپ 2019ء کیلئے براہ راست کوالیفائی کرنے کی 30 ستمبر2017ء کی کٹ آف ڈیٹ سے پہلے ہونے ہیں۔جس میں ممکنہ ناکامیاں بنگلہ دیش کو ون ڈے رینکنگ میں پاکستان سے نیچے دھکیل سکتی ہیں اور اس کا براہ راست فائدہ گرین شرٹس کو ہوگا۔

سری لنکن ٹیم اس وقت پاکستان سے گیارہ اور بنگلہ دیش سے 9پوائنٹس کی برتری کے ساتھ چھٹے نمبرپر موجود ہے جس کی فوری تنزلی کا امکان موجود نہیں ہے جو اگرجنوبی افریقہ کے حالیہ دورے میں پانچوں ون ڈے میچز بھی ہارجاتی ہے تو اُس کی چھٹی پوزیشن محفوظ رہے گی۔

پاکستان ٹیم کیلئے اگلی انٹرنیشنل اسائنمنٹ دورۂ ویسٹ انڈیزہے جہاں اُس نے دوٹوئنٹی20اور تین ٹیسٹ میچوں کے علاوہ تین ون ڈے میچوں کی باہمی سیریز بھی کھیلنا ہے۔ویسٹ انڈیزنے پاکستان سے قبل انگلینڈکی میزبانی کرنی ہے جس میں وہ مہمان سائیڈ کے خلاف تین ون ڈے میچوں کی سیریز کھیلے گی۔

اگر سیریزکے تینوں میچوں میں کیریبئن سائیڈکو شکست ہوجاتی ہے توتین پوائنٹس گنوانے کے سبب اُس کا خود سے اوپری درجے پر موجود پاکستان سے فاصلہ بڑھ کر چھ پوائنٹس ہوجائے گا۔جس سے پاکستان کی آٹھویں پوزیشن کافی حد تک مضبوط اور اُس کا ورلڈکپ 2019ء کی کٹ آف ڈیٹ تک ٹاپ8 ٹیموں میں برقرار رہنے کا امکان بڑھ جائے گا۔

دوسری جانب،اگرویسٹ انڈین ٹیم انگلینڈکے خلاف ہوم سیریزکسی بھی مارجن سے جیت جاتی ہے تب بھی پاکستان کیلئے موقع ہوگاکہ وہ کیربیئن سائیڈ کے خلاف کلین سوئپ کرکے بنگلہ دیش کی جگہ ساتویں درجے پر براجمان ہوجائے۔

تاہم اس حوالے مزید کچھ کہنا قبل ازوقت ہوگا کیونکہ اس کے دوران درجنوں ون ڈے میچز کھیلے جانے ہیں جن کے نتائج آنے کے بعد ہی اصل تصویر سامنے آئے گی لیکن بہرحال! یہاں یہ کہنا درست ہوگا کہ ورلڈکپ2019ء کیلئے پاکستان کے کوالیفائنگ رائونڈکھیلنا کا امکان کم ہورہا اور اُس کے براہ راست شرکت کا امکان بڑھ رہاہے۔

loading...

یہ متعلقہ مواد بھی پڑھیں

پاکستان کی ون ڈے رینکنگ بہتری کا سری لنکاپرانحصار

89پوائنٹس کے ساتھ آئی سی سی ون ڈے رینکنگ میں آٹھویں درجے پر موجود پاکستان …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے